Friday , December 4 2020

پانی میں انگلیوں کے پوروں پر جھریاں کیوں پڑ جاتی ہیں؟

آپ بہت دیر تک ہاتھ پانی میں ڈبو کر رکھیں تو انگلیوں کے پوروں کی جلد سکڑ جاتی ہے۔ اسی طرح بہت دیر پانی میں رہنے پر پیروں کی انگلیوں کے پوروں کے ساتھ بھی یہی کچھ ہوتا ہے۔ سوال یہ ہے کہ ایسا ہوتا کیوں ہے؟

بتایا یہی جاتا ہے کہ انسانی جسم کا سب سے بڑا عضو جگر ہے، مگر حقیقیت یہ ہے کہ جلد انسانی جسم کا سب سے بڑا عضو ہے۔ ایک بالغ شخص کی جلد کا کل وزن لگ بھگ آٹھ پاؤنڈ (تقریباﹰ چار کلو) تک ہوتا ہے اور یہ تقریباﹰ بائیس مربع فٹ تک کے حجم کی حامل ہوتی ہے۔
انسانی اعضاء والے جانوروں کی تیاری کی اجازت دے دی گئی
پیشاب بھی توانائی کے حصول کا ذریعہ، عملی استعمال قریب تر
جلد جسم کی حرارت برقرار رکھنے کا ایک عمدہ آلہ ہے اور واٹر پروف بھی ہے۔ مگر آپ نے دیکھا ہو گا کہ پانی میں بہت دیر تک ہاتھ موجود رہے یا آپ خود سوئنگ کے لیے کسی تالاب یا کسی سوئمنگ پول میں اتریں تو کچھ وقت میں آپ کے ہاتھوں اور پیروں کے پوروں کی جلد سکڑ جائے گی اور وہاں عارضی جھریاں بیدار ہو جائیں گے۔ یہ کوئی زندگی اور موت کا مسئلہ نہیں ہے اس لیے شاید آپ نے اس کی وجوہات پر غور بھی نہ کیا ہو، مگر اس سے جڑے سائنسی حقائق نہایت دلچسپ ہیں۔
سائنس دانوں کی رائے
سائنس کی کلاس میں شاید آپ نے اوسموسس کا عمل پڑھا ہو۔ یعنی کوئی مائع کس طرح خلیات کی دیواروں اور میمبرینز سے گزرتا ہے۔ لوگ یہی سوچا کرتے تھے کہ شاید یہی عمل ہاتھوں اور پیروں کی انگلیوں میں پانی میں جھریاں پیدا کرتا ہے۔

ایسا ہی پیروں کے ساتھ بھی ہے۔ گیلی زمین پر ننگے پیر چلتے ہوئے انگلیوں پر پیدا ہونے والی یہ عارضی جھریاں پھسلنے سے بچاتی ہیں۔ سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ ممکنہ طور پر اس عمل کا آغاز ہزاروں لاکھوں برس قبل انسانی جد میں کسی کو بارش میں شکار بننے سے بچنے کے لیے فرار ہونے سے ہوا ہو۔ تاہم دیگر سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ ان جھریوں سے ہاتھوں اور پیروں کی گرفت پر کچھ فرق نہیں پڑتا اور ان عارضی جھریوں کی پیدائش کی وجہ کچھ اور ہو سکتی ہے۔

اس حوالے سے ابھی بہت کچھ سیکھنے اور جاننے کی ضرورت موجود ہے۔ ایک سوال یہ بھی اہم ہے کہ کیا ایسا تمام ایسے جانوروں میں ہوتا ہے، جو انسانوں کی طرح ہاتھوں کا استعمال کرتے ہیں؟  اور یہ بھی کہ اگر یہ فائدہ مند شے ہے، تو یہ جھریاں مسلسل کیوں نہیں رہتیں؟

About idealurdu

Check Also

کورونا وائرس کتنی تیزی سے پھیلتا ہے؟ جرمن سائنسدانوں کا تجرباتی کنسرٹ

جرمن سائنس دان ایک تجرباتی کنسرٹ میں ایسے مشاہدے کی کوشش میں ہیں کہ بڑے …